ہدایات و قوانین داخلہ
۱۔ طالب علم اپنے اوقات درس میں بلا اجازت مہتمم یا صدر مدرس جامعہ سے باہر نہ جا سکے گا۔
۲۔ جو طالب علم بلا اجازت مہتمم ایک ہفتہ سے زیادہ غیر حاضر رہے گا وہ مستوجب اخراج ہوگا۔
۳۔ جو طالب علم بخوف امتحان غیر حاضر ہوگا وہ مستحق اخراج یا تنزل ہوگا۔
۴۔ جو طالب علم طویل رخصت پر جائے گا تو اس کو کتب جامعہ داخل کرنا لازم ہوگا۔
۵۔ ہر طالب علم کو بضرورت شدیدہ ایک ماہ تک رخصت دی جا سکتی ہے۔
۶۔ جس طالب علم کو منجانب جامعہ وظیفہ یا امداد طعام و غیرہ دی جاتی ہے امتحان میں عدم کامیابی پر اسکی امداد بند کر دیجائیگی۔
۷۔ اسباق کی پابندی نیز مطالعہ و تکرار کا اہتمام آداب درس و احترام درسگاہ ملحوظ رکھنا ضروری ہوگا۔
۸۔ تقسیم اسباق کے بارے میں ناظم تعلیمات کے حکم کی پابندی لازمی ہوگی۔
۹۔ مستعد طلبہ کو سالانہ امتحان میں اعلیٰ کامیابی پر خصوصی انعام بھی دیا جائے گا۔
۱۰۔ اگر طالب علم سالانہ امتحان میں اہم کتابوں میں کامیاب نہ ہوگا تو سال لوٹا دیا جائے گا۔
۱۱۔ اگر کوئی طالب علم ایسا کام کریگا جو مفاد جامعہ کے خلاف ہوگا تو مستحق سزا ہوگا۔
۱۲۔ ہر طالب علم کو اساتذہ و ذمہ داران جامعہ کا ادب و احترام ضروری ہوگا۔
۱۳۔ ہر طالب علم کو جامعہ کے نظم و ضبط کے ماتحت رہنا ہوگا اور فتنہ و فساد سے اجتناب لازم ہوگا۔
۱۴۔ ہر طالب علم کو اسی جگہ رہنا لازم ہوگا جو اس کے لئے ناظم دارالاقامہ منجانب جامعہ مقرر کریں گے۔
۱۵۔ ہر طالب علم کے لئے ضروری ہوگا کہ وہ اپنے قول و فعل میں شائستگی و تہذیب کو ملحوظ رکھے۔
۱۶۔ فرائض و واجبات کی ادائیگی بالخصوص نماز پنجگانہ باجماعت ادا کرنا ضروری ہوگا۔
۱۷۔ اپنا لباس، وضع قطع مطابق شریعت رکھنا ضروری ہوگا غیر شرعی و ضع قطع پر اخراج کیا جاسکتاہے۔
۱۸۔ شب میں بلا اجازت ناظم دارالاقامہ کسی دوسری جگہ قیام کرنا یا کسی اجنبی شخص کو اپنے پاس قیام کرانا جرم ہے۔
۱۹۔ اپنی رہائش گاہ کی صفائی و ستھرائی ضروری ہوگی خلاف ورزی کی صورت میں سزادیجائیگی۔
۲۰۔ جس طالب علم کی ڈاڑھی منڈی ہوئی یا کٹی ہوئی ہوگی وہ داخلہ کا مجاز نہ ہوگا۔
۲۱۔ تمام طلبہ کو مذکورہ بالا قوانین و ہدایات پر عمل کرنا لازم ہوگا۔